اسرائیل سے معاہدے سیاسی غلطی ہے، 30ممالک کے سربراہان کو خط لکھ دیے گئے


مقبوضہ غزہ (این این آئی ) اسلامی تحریک مزاحمت حماس کے سیاسی شعبے کے سربراہ اسماعیل ھنیہ نے 30 مسلمان اور عرب ممالک کے سربراہان کو مکتوب ارسال کیا ہے جس میں انہوں نے ان ملکوں کی قیادت سے اسرائیل کے ساتھ تعلقات استوارنہ کرنے پر زور دیا ہے اورکہاہے کہ اسرائیل کو تسلیم کرنا ایک بڑا سیاسی جرم اور غلطی ہے جو فلسطینی قوم کے حقوق کی قیمت پر کی جا رہی ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق اپنے مکتوب میں اسماعیل ھنیہ نے کہا کہ اس وقت قضیہ فلسطین کے حال، مستقبل اور اس کے وجود کو سنگین اور غیرمعمولی خطرات

اور چیلنجز درپیش ہیں۔ قابض اسرائیلی ریاست کی جانب سے ہمارے وطن عزیز، ہماری قوم اور ریاست کیباشندوں کے خلاف بلا تفریق دہشت گردی جاری ہے۔ غزہ کی ظالمانہ ناکہ بندی کئی سال سے بدستور قائم ہے۔ قابض ریاست اپنے مجرمانہ منصوبے بالخصوص یہودی آباد کاری، فلسطینی علاقوں کے الحاق، زمینوں پر غاصبانہ قبضے، القدس کو یہودیانے، مسجد اقصی کی زمانی اور مکانی تقسیم، القدس میں عرب ،اسلامی اور مسیحی آثار کو مٹانے، گھروں کی مسماری، فلسطینیوں کو ھجرت پر مجبور کرنے، انہیں شہر سے بے دخل کرنے اور زندانوں میں قید فلسطینیوں پر جبرو تشدد کے حربے بڑھتے جا رہے ہیں۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں