بچیوں کی شادی کے لئے کم از کم عمر کتنی مقرر کی جائے ، خواتین اراکین اسمبلی کا بڑا مطالبہ


لاہور(این این آئی)خواتین ارکان اسمبلی اور سول سوسائٹی نے مطالبہ کیا ہے کہ بچیوں کی شادی کے لئے کم از کم عمر 18سال مقرر کی جائے،سپریم کورٹ نے کہا ہے شناختی کارڈ پر شادی ہونی چاہیے،پنجاب میں قانون سازی کر کے شادی کی عمر 18 سال ہونی چاہیے ،بچیوں کا مورٹیلٹی ریٹ پاکستان میں بہت زیادہ ہے،چھوٹی عمر میں شادی ہو جائے تو بچیوں پر دبائو ہوتا ہے کہ انہوں نے ایک سال میں بچہ پیداکرنا ہے۔لاہور پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سماجی تنظیم ’’برگد‘‘کی ایگزیکٹیو ڈائریکٹر صبیحہ شاہین،رکن اسمبلی سعد یہ سہیل رانا،بشریٰ انجم بٹ،عظمیٰ کاردار،سائقہ رانی

سمیت سول سوسائٹی کی خواتین نے مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا۔صبیحہ شاہین نے کہا کہ بچیوں کی شادی کے لئے کم از کم عمر 18سال مقرر کی جائے۔سپریم کورٹ نے کہا ہے کہ شناختی کارڈ پر شادی ہونی چاہیے۔پنجاب میں قانون سازی کر کے 18 سال کی عمر شادی کی ہونی چاہیے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں