بہاولپور میں 6 افراد کی خاتون کی آبر وریزی کیس میں سنسنی خیز انکشافات سامنے آ گئے


بہاولپور( آن لائن )بہاولپور میں گذشتہ ہفتے ایک انسانیت سوز واقعہ پیش آیا تھا جہاں چھ مسلح ملزمان میں گھر میں گھس کر اہل خانہ کے سامنے لڑکی کی آبرو ریزی کی ۔ تاہم اب اس کیس میں سنسنی خیز انکشافات سامنے آئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی انویسٹی گیشن نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے اس کیس کے حوالے سے بتایا کہ بہاولپور کی تحصیل حاصل پور میں گذشتہ ہفتےچھ افراد نے والدین اور بھائیوں کے سامنے ایک لڑکی کو آبرو ریزی کا نشانہ بنایا تھا۔اس واقعہ میں ایک خاتون بھی ملوث ہے جس نے اپنا انتقام

پورا کرنے کے لیے لڑکی کی 6 لڑکوں سے عصمت دری کروائی۔ ایس ایس پی انویسٹی گیشن کے مطابق ملزمہ کو گرفتار کرلیا گیا ہے علاوہ ازیں دو مزید ملزمان کو بھی حراست میں لے لیا گیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ گرفتار ہونے والے ملزمان کی شناخت نجمہ، نصیر اور وسیم کے ناموں سے ہوئی۔ جن سے مزید تحقیقات کی جارہی ہیں۔پولیس افسر کے مطابق ملزمان نے لڑکی کے بھائی کو بھی بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا۔ یاد رہے کہ گذشتہ ہفتے پولیس نے اس انسانیت سوز واقعہ کا مقدمہ متاثرہ لڑکی کے بھائی کی مدعیت میں درج کیا تھا ۔ پولیس کے پاس درج کی گئی ایف آئی آر میں متاثرہ لڑکی کے بھائی نے مقف اپنایا کہ ملزمان نے اہل خانہ کے سامنے بہن سے زیادتی کی اور اس کے جسم کا ایک حصہ کاٹ ڈالا۔پولیس نے متاثرہ لڑکی کے بھائی کی مدعیت میں مقدمہ درج کیا جس کے بعد پولیس نے شبہ ظاہر کرتے ہوئے کہا تھا کہ ابتدائی تفتیش کے مطابق ملزمان اور متاثرہ گھرانے میں پرانی رنجش تھی، خدشہ ہے کہ ملزمان نے بدلے کی آگ میں گھنانا اقدام کیا۔ اس واقعہ کے بعد علاقہ میں بھی خوف و ہراس پھیل گیا تھا۔ واضح رہے کہ گذشتہ کچھ عرصہ کے دوران ملک بھر میں لڑکیوں سے آبرو ریزی کے کئی واقعات رپورٹ ہو رہے ہیں جنہوں نے شہریوں میں تشویش میں اضافہ کر دیا ہے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں