بیٹوں، بھائی، بہنوئی کو جعلی مقابلے میں نہ مار دیا جائے مفتی کفایت اللہ نے سنگین خدشے کا اظہار کردیا


مانسہرہ،اسلام آباد(پی پی آ ئی، این این آئی )جمعیت علمائے اسلام (ف) کے رہنما مفتی کفایت للہ نے کہا ہے کہ خدشہ ہے دو و بیٹے بھائی بہنوئی کوجعلی مقابلے میں کہیں مار نہ دیا جائے۔ ٹوئٹر پیغام میں مفتی کفایت اللہ نے کہا ہے کہ گزشتہ شب ہمارے گھروں پر دھاوا بول کر بدتمیزیکی گئی دو بیٹے بھائی بہنوئی کو ماورائے عدالت اغوا کرکے حبس بے جا میں رکھاگیا عدالتی حکم پر انہیں بجائے رہا کرنے فرار کیا گیا۔ اب خدشہ ہے کہ انہیں مقابلے میں مار دیا جائے ان درندوں کی موجودگی میں میرا گھر خواتین و بچے

تک غیر محفوظ ہیں۔دریں اثنا جے یو آئی(ف)کے ترجمان نے کہاہے کہ غداری کا مقدمہ مفتی کفایت اللہ پر نہیں عمران خان پر بنتا ہے۔ مفتی کفایت اللہ کے بھائی،بیٹوں اور دیگر اہلخانہ کی گرفتاری پر ترجمان جے یوآئی نے رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ پی ٹی آئی حکومت بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئی ہے، اسلم غوری نے کہاکہ مفتی کفایت اللہ نے جو کچھ کہا اس سے زیادہ عمران خان کہتے رہتے ہیں،غداری کا مقدمہ مفتی کفایت اللہ پر نہیں عمران خان پر بنتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ آزادی اظہار پر پابندی،بنیادی حقوق سلب کرنا آئین کی توہین،غداری ہے۔ انہوں نے کہاکہ 22کروڑ ہم وطنوں کو انکے حقوق سے محروم کرنے،آئین شکنی پر پی ٹی آئی حکومت کے خلاف کارروائی ہونی چاہیے۔انہوں نے کہاکہ مفتی کفایت اللہ کے اہلخانہ کی گرفتاری کس جرم کے تحت کی گئی،عمران خان جو کچھ فوج کے خلاف کہتے رہے اس پر کیا کاروائی کی گئی۔ انہوں نے کہاکہ اوچھے ہتھکنڈوں،انتقامی کاروائیوں اور مجرمانہ طرز حکمرانی کا دور جلد ختم ہونے والا ہے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں