دھرنے دینے کا اعلان کر دیا گیا


کراچی (این این آئی)امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے جمعہ سے شہر بھر میں دھرنے دینے کا اعلان کیا ہے۔ادارہ نور حق کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ پیپلز پارٹی اور ایم کیو ایم کراچی دشمنی کا ثبوت دے رہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ پی ایس پی کے لوگ چائنہکٹنگ میں ملوث رہے ہیں جبکہ پیپلز پارٹی کراچی کو صوبے کا حصہ ہی نہیں سمجھتی، نہ ملازمتیں دی جا رہی ہیں اور نہ ادارے ٹھیک کئے جارہے ہیں۔امیر جماعت اسلامی کراچی نے مطالبہ کیا کہ کراچی کی آبادی

تین کروڑ ہے اسے درست گنا جائے۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے کراچی کے لئے گیارہ سو ارب پیکج کا اعلان کیا جس کے کراچی کے شہریوں کو کوئی فائدہ نہیں ہوا جبکہ جماعت اسلامی نے اس شہر کی تعمیر و ترقی میں کرادر ادا کیا، کورونا وائرس کے دنوں میں عوام کا ساتھ دیا۔حافظ نعیم الرحمن نے واضح کیا کہ جمعہ سے تحریک حقوق کراچی کے تحت احتجاج کا آغاز کیا جارہا ہے، پہلا دھرنا نرسری اسٹاپ پر ہوگا، 16 جنوری کو فائیو اسٹار چورنگی، 17 جنوری کو الہ دین پارک، 30 جنوری کو کریم آباد جبکہ 28 جنوری کو شہر کے 50 کے قریب مقامات پر دھرنے دئیے جائیں گے۔دوسری جانب جے یو آئی نے اسرائیل نامنظور ملین مارچ کی تیاریاں تیز کردیں،اس حوالے سے صوبائی جنرل سیکرٹری مولاناراشد محمود سومرونے بدھ کوضلع غربی کراچی کا تنظیمی دورہ کیا،جامعہ اسلامیہ رحمانیہ اورنگی ٹاؤن میں ورکرز کنونشن اورجامعہ منبع العلوم منگھوپیر میں طلباء کنونشن سے خطاب کیا،ضلع میں واقع بڑے دینی جامعات دارالعلوم صفہ، جامعہ ندوۃ العلم جامعہ حقانیہ بلدیہ ٹاؤن، جامعہاحیاء العلوم سعیدآباد، جامعہ فاروقیہ فیز2 کادورہ کیا،مہتممین مدارس،اساتذہ اور منتظمین سے ملاقاتیں کیں،انہیں اسرائیل نامنظور ملین مارچ میں شرکت کی دعوت دی جسے علمائے کرام نے قبول کیا،باوانی حب چوکی میں مرکزی نائب امیرمولاناعبدالقادر قاسمی سے بھی خصوصی ملاقات کی،ضلعی جنرل سیکرٹری مولانا فخرالدینرازی نے صوبائی قائد کو خوش آمدید کہا اور ضلع غربی کی تیاریوں سے آگاہ کیا،جس پرصوبائی قائدین نے اطمینان کا اظہارکیا، ان مواقع پرسینیٹرمولانا راحت حسین، مولانا عبد الکریم عابد، مولانا فخرالدین رازی،مولانا شیریں محمد،مولانا نصیر الدین سواتی، مولانا امین اللہ،مولانا سمیع الحق سواتی،ڈاکٹرعطاء الرحمن خان،مفتی فیضالحق،حافظ محمد نعیم،نیک امان اللہ مسعود،مفتی محمدخالد،مولانا بلال، حبیب خاطر،مولانا عبداللہ بلوچ، شریف گبول،قاری سعید مہمند،ثناء اللہ شینواری،عبدالواحد خان،اظہرشاہ سمیت ضلعی وپی ایس کے تمام عہدیداران موجودتھے،مولانا راشد محمود سومرو نے کہا کہ21 جنوری کا اسرائیل نامنظور ملین مارچ اسرائیل نوازحکمرانوںکی سیاسی موت ثابت ہو گا،21 جنوری کو کراچی کی شاہرائیں، فضائیں اور ہوائیں اس بات کی گواہ بن جائیں گی کہ چور دروازے سے آنے والے یہودی ایجنٹ حکمرانوں کے دن گنے جا چکے ہیں اور جلد مولانا فضل الرحمن کی قیادت میں وہ حقیقی تبدیلی آئے گی جس سے ملک میں خوشحالی وترقی آئے گی،حکمرانوں کے دن گنے جا چکے ان کے اقتدار کی موت نوشتہ دیوار ہے، اسرائیل تسلیم کرنے کی مذموم مہم کٹھ پتلی حکمرانوں کی منظم منصوبہ بندی کا حصہ ہے جسے اسلامیان پاکستان ناکام بنادیں گے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں