سوشل میڈیا پر خواتین بن کر لوگوں کو لوٹنے والے گرفتار غیر ملکی گروہ کی سرگرمیوں کے حوالے سے مزید چونکا دینے والے انکشافات


لاہور( این این آئی ) سوشل میڈیا پر خواتین بن لوگوں کو لوٹنے والے گرفتار غیر ملکی گروہ کی سرگرمیوں کے حوالے سے چونکا دینے والے انکشافات سامنے آئے ہیں،ملزمان محض مردوں ہی کو نہیں بلکہ خواتین کو بھی مختلف بہانوں سے لوٹا اور پاکستانیوں سے کروڑوں روپے ہتھیا کر بیرون ملک بھیجوائے۔ڈائریکٹر ایف آئی اےسائبرکرائم عبدالرب نے نائیجرین گروہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ لاہور میں پکڑے جانے والے پانچوں غیر ملکیوں کے پاسپورٹ اور ویزے تک جعلی تھے۔عبدالرب نے مزید بتایا کہ ملزمان سے تفتیش کے دوران یہ بھی پتہ چلا ہے کہ انہوں نے محض مردوں

ہی کو نہیں بلکہ خواتین کو بھی مختلف بہانوں سے لوٹا اور پاکستانیوں سے کروڑوں روپے ہتھیا کر بیرون ملک بھیجوائے۔گروہ کے چھٹے پاکستانی رکن ہارون کے حوالے سے ایف آئی اے کے افسر نے بتایا کہ اس کے متعدد بینک اکائونٹس تھے اور پاکستانیوں سے دھوکے کے ذریعے ہتھیائی ہوئی رقوم باہر بھجوادی جاتی تھیں جبکہ اس گروہ کے شکار ہوئے افراد میں اچھے خاصے تعلیم یافتہ لوگ بھی شامل تھے۔ایف آئی اے کے افسر نے عوام سے ہوشیار رہنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ سوشل میڈیا یا فون کے ذریعے رابطہ کرکے بھاری رقوم کا جھانسہ دینے والوں کو کوئی رقم ادا نہ کی جائے۔واضح رہے کہ لاہور میں فیس بک پر دوستی کے بعد بننے والی گرل فرینڈز نائیجرین نوجوانوں کا گروہ نکلا تھا جو کئی ماہ سے مختلف جھانسے دے کر شہریوں کو لوٹ رہے تھے۔دوسری جانب جمشید روڈ پر اے ٹی ایم مشین توڑنے والے ملزم کو لوگوں نے پکڑکرپولیس کے حوالے کردیا۔جمشید کوارٹرکے علاقے جمشید روڈ میزان بینک کی اے ٹی ایم مشین روممیں گھس کر ایک نوجوان مشین کھول کر چوری کرنے کی کوشش کر رہا تھا بینک کا الارم بجنے پر سیکورٹی کے عملے نے مکینوں کی مدد سے ملزم کو پکڑ لیا ،مددگار جمشید نے موقع پر پہنچ کر مذکورہ بالا شخص کو حراست میں لے کر پولیس کے حوالے کردیا،جس سے مزید چھان بین جاری ہے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں