سکھوں نے شیطان راون کی جگہ نریندر مودی کے پتلے جلا دیے ، مودی کو سب سے بڑا شیطان قرار دیدیا


امرتسر( آن لائن ) بھارتی پنجاب میں سکھوں نے روایتی تہوار دسہرہ منانے کے دوران شیطان راون کو نذر آتش کرنے کی روایت توڑتے ہوئے اس بار وزیراعظم نریندر مودی کے پتلے جلا دیئے۔بھارتی میڈیا کے مطابق ملک میں دسہرہ کا تہوار منایا گیاجس میں سب سے بڑے شیطان راون کو جلا کر بھسم کردیا جاتا ہے اور صدیوں سے رویت جاری ہے لیکن اس سال بھارتی پنجاب میں سکھوں نے شیطان راون کے بجائے مودی کے پتلے جلادیئے۔اس حوالے سے کسان یونین کے عہدیداروں نے میڈیا کو بتایا کہ وزیراعظم نریندر مودی بھارت کے لیے سب سے بڑا شیطان

ثابت ہوئے ہیں اس لیے دسہرہ کے موقع پر اس بڑے شیطان کو جلانے سے ملک میں سکون ہو جائے گا۔دسہرہ کے موقع پر بھارتی پنجاب کی مقامی تنظیموں کی جانب سے بھٹنڈہ، ترن تارن، فیروز پور، امرتسر وغیرہ میں علاقہ مکینوں میں مودی کے پتلے مفت تقسیم کیئے اور عوام نے مختلف مقامات پر لے جاکر ان پتلوں کو جلا دیا۔واضح رہے کہ بھارت میں مودی سرکار کورونا وبا سے نمٹنے میں یکسر ناکام ہوچکی ہے بغیر منصوبے کے لاک ڈائون کی وجہ سے مزدورں کی زندگی اجیرن ہوگئی اور 100 سے زائد مزدور اپنے شہروں کو جاتے ہوئے مختلف واقعات میں ہلاک ہوگئے جب کہ غلط پالیسیوں کے باعث درجنوں کسانوں نے خودکشی کرلی۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں