فقیرکے مرنے کے بعد ملنے والی رقم گننے میں 8گھنٹے لگ گئے برآمد کی گئی بوری اور بیگ میں کتنی مالیت کی رقم موجود تھی، پولیس بھی چکرا گئی ‎


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )فقیرکے مرنے کے بعد ملنے والی رقم گننے میں 8گھنٹے لگ گئے،برآمد کی گئی بوری اور بیگ میں کتنی مالیت کی رقم موجود تھی، پولیس بھی چکرا گئی ‎۔ ممبئی کے ایک ریلوے اسٹیشن پردو روز قبل گووندی ریلوے اسٹیشن پرٹرین کی ٹکر سے ایک فقیر ہلاک ہوگیا تھا، جب ریلوے پولیس نے مرنے والے فقیرکے لواحقین کو تلاش کیا اوراس کی جھونپڑی تک پہنچی تونوٹوں کی بوریاں دیکھ کر دم بخود رہ گئی۔قومی اخبار کے مطابق پولیس کے حیران ہونے کی وجہ یہ تھی، ریلوے پولیس کو جھونپڑی میں پیسوں سے بھری بوری اور بیگ

ملے۔برآمد کی گئی بوری اور بیگ میں سکے اورنوٹوں پر مشتمل 2 لاکھ مالیت کی رقم موجود تھی جس کی گنتی کے لیے پولیس کو آٹھ گھنٹے کا وقت لگا۔یہی نہیں پولیس نے بھکاری کے گھر سے بینک کی پاس بک بھی برآمد کی جس میں 8 لاکھ 77 ہزار روپے جمع کیے جانے کی بینک رسید بھی موجود تھی۔بھکاری کی شناخت برادی چند آزاد کے نام سے کی گئی اور بتایا جا رہا ہے کہ آزاد ممبئی کی مقامی ٹرین میں بھیک مانگتے وقت ٹرین سے ٹکرایا اورموقع پر ہی دم توڑ گیا۔ریلوے پولیس کو برادی چند آزاد کی جھونپڑی سے آدھارکارڈ، پی اے این کارڈ سمیت سینئر سٹیزن کارڈ بھی موصول ہوا جس پر راجستھان کا پتہ درج ہے۔فقیرکے پڑوسیوں کا کہنا ہے کچھ عرصہ قبل آزاد کے اہل خانہ بھی اس کے ساتھ ہی جھونپڑی میں رہائش پذیر تھے لیکن پھر وہ آزاد کو چھوڑکرچلے گئے اورآزاد نے بھیک مانگنا شروع کی۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں