وزیراعظم عمران خان نے نبی کریمؐ کی شان میں گستاخی کے خلاف مہم کی قیادت کرنے کا اعلان کر دیا


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے عیدمیلادالنبی ﷺکے سلسلہ میں قومی رحمتہ اللعالمین ﷺکانفرنس کے اختتامی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نبی کریمؐ کی شان میں گستاخی کیخلاف مہم کی قیادت کروں گا، ہم اس معاملے پر تمام عالمی فورمز پر بات کریں گے۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مسلمان ممالک کو متحد ہو کر مغربی ممالک کو بتانا ہوگا کہاس طرح کے اقدامات سے سوا ارب مسلمانوں کی دل آزاری ہوتی ہے،مسلمان ممالک کی قیادت کو ایک ہونا پڑے گا۔اس کانفرنس کا موضوع موضوع ماحولیاتی آلودگی اور ہماری ذمہ داری تھا۔وزیراعظم نے یہ کانفرنس ہر

سال منعقد کرانے کا اعلان کیا اور کہا کہ پاکستانی عوام بالخصوص نوجوانوں کو حضور اکرمؐ کی حیثیت سے متعلق مکمل آگاہی دینی ہے۔ حضرت محمدؐ کی سیرت طیبہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حضرت محمد ؐجیسا عظیم انسان آیا ہے اور نہ ہی آئے گا، دنیا کی سو عظیم شخصیات میں حضور اکرم ؐ کا پہلا نمبر ہے، اللہ نے قرآن پاک اور حضور اکرم ؐ کی زندگی کے ذریعے ہمیں راہ دکھائی۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مغرب میں رہنے والے حضرت محمد ؐکے ساتھ ہمارے تعلق سے آگاہ نہیں ہیں، ہم اللہ کے تمام پیغمبروں کا ادب و احترام کرتے ہیں۔مسلمانوں نے سلمان رشدی کی کتاب کے خلاف آواز اٹھائی، مسلمانوں کے بارے مغرب میں یہ تاثر لیا جاتا ہے ہم اظہار رائے کی آزادی کے خلاف ہیں اور تنگ نظر ہیں۔ اس حوالہ سے باقاعدہ منظم مہم چلائی گئی۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مغرب کا ایک چھوٹا سا طبقہ اسلام کے خلاف ہے، وہ طبقہ مسلمانوں کو برا دکھانا چاہتا ہے، ہمیں مغربی ممالک کو حضرت محمدؐکے ساتھ اپنے لگاؤ سے آگاہ کرنا چاہیے۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ یورپی ممالک میں ہولوکاسٹ پر بات نہیں کیجا سکتی، جس سے دوسروں کی دل آزاری ہو،ہمیں ایسی کوئی بات نہیں کرنی چاہئے، وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ اسلاموفوبیا کے معاملے پر دنیا کے تمام ممالک کے ساتھ رابطے کروں گا۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ حضور اکرمؐ کی بے حرمتی کسی صورت قبول نہیں کریں گے، تمام مسلم ممالک کو اس حوالے سے خطلکھے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اس طرح کی صورتحال میں مغربی ممالک میں مقیم مسلمانوں پر زندگی تنگ کر دی جاتی ہے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں