پاکستان، ایران، ترکی ٹرین سروس کے بعد پاکستان، افغانستان اور ازبکستان کے درمیان بھی ٹرین سروس شروع کرنے کا فیصلہ


اسلام آباد (این این آئی) وفاقی وزیر ریلوے اعظم خان سواتی اور مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد نے وزیر اعظم پاکستان عمران خان سے ملاقات کی۔ ملاقات کے دوران کارگو ٹرین سروس کے امور پر بات چیت ہوئی۔یہ ٹرین سروس افغانستان، تاجکستاناور ازبکستان چلانے پر غور کیا گیا۔وزیر اعظم کو بریفنگ دی گئی کہ ان تنیوں ممالک کے سربراہان نے اس پر اجیکٹ کی منظوری دے دی ہے، ورلڈ بنک نے 4.8بلین ڈالر اس پر اجیکٹ کی منظوری کے لئے جوائنٹ اپیل لیٹرلکھے گئے، اس ٹریک کی لمبائی 573کلو میٹر ہے اور یہ ٹریک جوکہ مزر شریف،کابل بذریعہ پشاور تک

شامل ہے۔ اس کے علاوہ ایم ایل ون پراجیکٹ افغانستان، ازبکستان کے صدود نے پہلے ہی اس پراجیکٹ کی منظوری دے چکے ہیں۔ بریفنگ میں بتایا گیا کہ ڈپٹی پر ائم منسٹر ازبکستان اگلے ہفتے دورہ پاکستان میں باہمی مفاہمتی یاداشت کی تقریب میں شرکت کرینگے اور اس پر اجیکٹ کے ذریعے تینوں ایشیا ئی مما لک کو باہمی بذریعہ ریل منسلک کر ینگے۔ بریفنگ میں کہا گیا کہ یہ منصوبہ خوش کن ہے متلقہ حکام مستقبل میں مزید رابطے بڑھانے کیلئے اس میں مختلف ممالک کو شمو لیت کابھی فیصلہ کر سکتے ہیں۔اس سے پاکستان کی بند رگاہوں اور اقتصادی سرگرمیاں بھی بڑھے گی جس سے پاکستان کی تجارت مزید مستحکم ہو گی۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں