پاکستان کا اپنا خلائی پروگرام شروع کرنے کا اعلان


اسلام آباد (اے پی پی،مانیٹرنگ ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان کی سالمیت اور خودمختاری کو یقینی بنانے کے سلسلے میں تذویراتی صلاحیتوں کو مزید مضبوط بنانے کے لئے تمام دستیاب وسائل بروئے کار لائے جائیں گے، پاکستان کی جوہری اورتذویراتی استعداد ایک مضبوط کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم کے تحت مکمل طور پر محفوظ ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سپارکو کے سیٹلائٹ گرانڈ سٹیشن کے دورے کے موقع پر کیا۔ وزیراعظم کو سپیس، سائنس اور ٹیکنالوجی کے شعبوں میں مقامی استعداد کار کی ترقی میں سپارکو کی کامیابیوں کے ساتھ ساتھ قومی سلامتی کو مضبوط

بنانے اور سماجی و قتصادی ترقی کے لئے سپارکو کی خدمات کے بارے میں بھی بریفنگ دی گئی۔سپارکو نے وزیراعظم عمران خان کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان اپنا خلائی پروگرام شروع کرے گا جس سے پلاننگ ڈویژن کے منصوبوں کو مانیٹر کیا جاسکے گا۔سپارکو کی جانب سے دی گئی بریفنگ میں مزیدکہا گیا کہ اس منصوبے سے بلین ٹری سونامی منصوبے کو بھی مانیٹر کیا جاسکے گا، وزیراعظم نے سپارکو کے دورے میں مختلف حصوں کے معائنے کے دوران انجینئرز اور سائنسدانوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی جوہری اور تذویراتی استعداد ایک مضبوط کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم کے تحت مکمل طور پر محفوظ ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم اپنے اہم قومی مفادات کے تحفظ کے لئے اپنی تذویراتی صلاحیت کو مستحکم بناتے رہیں گے۔ وزیراعظم نے سپیس ٹیکنالوجی کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے اس سے متعلق خدمات اور انفراسٹرکچر میں توسیع کے لئے ضروری تعاون فراہم کرنے کی یقین دہانی کرائی تاکہ نیشنل سپیس پروگرام 2047برائے سماجی و اقتصادی ترقی کو تقویت دی جا سکے۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں