کراچی کے اہم ہسپتال کا پرانا سامان بیچنے کی تیاریاں، مافیا نے قیمتی سامان غائب کرنا شروع کردیا، آکشن برانچ کا بھی پراسرار رویہ


کراچی (این این آئی) سول اسپتال کراچی میں اسپتال کا پرانا سامان بیچنے کی تیاریاں، خبر ملتے ہی اسپتال میں موجود مافیا نے قیمتی سامان غائب کرنا شروع کردیا، رات کے وقت مختلف راہداریوں میں لگے بلب اور اسٹریٹ لائٹس خراب ہونے کے باعث سیکورٹی گارڈز کی آنکھوں میں دھول جھونکنا آسان ہوگیا، تفصیلات کے مطابق صوبے کے سب سے بڑے تدریسی اسپتال میں کرپشن
کے عوض طبی آلات کی مہنگے داموں خریداری ، ادویہ کی خریداری میں من پسند افراد کو ٹھیکے دینے کی خبریں میڈیا کی زینت بنتی رہی ہیں جبکہ انتظامیہ نے کانوں پر جوں نہ رینگی گزشتہ

کئی عرصے سے مخصوص لوگ مخصوص ڈیوٹیوں پر براجمان ہیں ۔ باخبر ذرائع کے مطابق انتظامیہ نے طبی آلات، الیکٹرونکس، برقیات اور دیگر سامان جو استعمال میں نہیں آرہا ہے اس کو بیچنے کی تیاری شروع کردی ہے بظاہر اب تک تو کوئی ٹینڈر یا انتظامیہ کی طرف سے ایسی کوئی اطلاع سامنے نہیں آئی ہے لیکن ذرائع کا کہنا ہے کہ اندرون خانہ سامان بیچنے کی تیاری شروع ہوچکی ہے اور ٹینڈر کیلئے من پسند ٹھیکیداروں میں زیادہ پیسے دینے والوں کے نام پر غور کیا جارہا ہے ۔ محکمہ صحت سندھ اور ہنگامی نوعیت کا از خود خریدا جانیوالا سامان خرابی کی صورت میں اسٹور میں جمع کیا جاتا ہے جبکہ سپروائزروں کی نااہلی کے باعث کئی طبی آلات وارڈ ز کے کسی کونے میں بھی پڑے دکھائی دیتے ہیں اب جبکہ ان میں کچھ چیز اصل حالت میں بھی موجود ہوتی ہیں ان میں اسپتال کی چور مافیا جو قریبی سرکاری گھروں میں رہائش پذیر ہے سامان غائب کردیتی ہے ۔ مختلف راہداریوں میں لگے بلب اور اسٹریٹ لائٹس کی خرابی نے مافیا کا کام مزید آسان کردیا ہے ۔ آکشن برانچ کا پراسرار رویہ اور مختلف کرپٹ سپر وائزر کی موجودگی نے موجود ہ صورتحال کو مزید پیچیدہ بنادیا ہے ۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں