کسی بلیک میلنگ میں نہیں آئیں گے، ادارے وزیراعظم کی پشت پناہی چھوڑدیں، کردار کشی بند کی جائے، جے یو آئی (ف) کا اعلان


اسلام آباد (این این آئی)جے یو آئی کی مرکزی مجلس عاملہ نے مولانا فضل الرحمن کے خلاف نیب کو استعمال کرنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ کسی بلیک میلنگ میں نہیں آئیں گے، ادارے وزیراعظم کی پشت پناہی چھوڑدیں، 21 جنوری 2021 کو اسرائیل کے خلاف احتجاج کراچی میں کیا جائیگا۔جے یو آئی کی مرکزی مجلس عاملہ اور صوبائی امراء کے اجلاس کے بعد پریسکانفرنس کرتے ہوئے سیکرٹری جنرل عبدالغفور حیدری کا کہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمان اور جے یو آئی کسی بلیک میلنگ میں نہیں آئیں گے، نیب انتقامی اورسیاستدانوں کی پگڑی اچھالنے کا ادارہ ہے، نیب

جن کا دبائو ہے وہ چاہتے ہیں ان کا نام نہ لیں تو آئین پاکستان میں رہیں۔جے یو آئی راہنماء کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم کی تحریک منطقی انجام تک پہنچنے تک چلتی رہے گی، حافظ حسین احمد اور مولانا شیرانی کے حوالے سے کمیٹی بنادی ہے، جو ایک سے دو دن کے اندر فیصلہ کرے گی، پی ڈی ایم سربراہان سینٹ اور ضمنی انتخابات بارے فیصلہ کرے گی، 21 جنوری 2021 کو اسرائیل کے خلاف احتجاج کراچی میں کیا جائیگا۔انہوں نے کہاکہ آپ نے سلیکٹ کرلیا اب تو پتہ چل گیا ہے ،اب ہی ادارے باز آجائیں،کیا اب بھی اداروں کو پتہ نہیں چلا کہ یہ کتنا نااہل ہے ،اب نیب کا استعمال بند کردیں۔ کہتے ہیں نیب نے مولانا فضل الرحمن کو بلایا ہے ان کو شرم نہیں آتی۔ عبدالغفور حیدری نے کہا کہ ماضی میں بھی بلیک میل کرنے کی ہمیں کوشش کی جاتی رہی ہے ،ہم بلیک میل نہیں ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ لاہور جلسے کے بعد ان کی چیخیں نکلی ہیں تو اب بدمعاشی پر اتر آئے ہیں،نیب انتقامی ادارہ ہے،اب نیب بھی اوپر سے دباو کا اعتراف کررہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ کہتے ہیں ہمارا نام نہ لو،جب آپ سب کچھ کروائیں گے تو نام لینا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ عمران اور نیب کچھ نہیں وہ شو پیس ہیں۔جے یو آئی رہنمانے کہا کہ سیاستدانوں کی کردار کشی بند کی جائے،اگر باز نہ آئے تو ہمارا احتجاج محرکین کے خلاف ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ ہماری کردار کشی جاری رہی تو ہم سمجھیں گے نیب اور عمران خان نہیں پیچھے والوں کو سامنے لائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ آج بھی دست شفقت عمران سے ہٹاؤ عمران دھڑام سے گر جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اکیس جنوری کو کراچی میں اسرائیل کے خلاف مارچ ہوگا۔





Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں